You are currently viewing عروقی ادویات۔نفع و مضرات۔
عروقی ادویات۔نفع و مضرات۔

عروقی ادویات۔نفع و مضرات۔

عروقی ادویات۔نفع و مضرات۔

عروقی ادویات۔نفع و مضرات۔
عروقی ادویات۔نفع و مضرات۔

عروقی ادویات۔نفع و مضرات۔
Vascular drugs. Benefits and harms.
أدوية الأوعية الدموية فوائدها وأضرارها.
حکیم املیوات قاری محمد یونس شاہد میو

خون کی نالیوں اور دوران خون کو متاثر کرنے والے مختلف عروقی حالات کی تشخیص، انتظام اور علاج میں اہم کردار ادا کرتی ہے۔
دیسی طب میں انہین نالیوں مین خون کے بہائو کو دیکھتے ہوئے نبض سے تشخیص کی جاتی ہے۔اور انسانی جسم میں خون کے بہائو کا دبائو اور اس کی کمی زیادتی معلوم کی جاتی ہے
سنٹر فار ویسکولر میڈیسن آف گلین برنی ایک سرکردہ صحت کی سہولت ہے جو مریضوں کو جامع عروقی نگہداشت فراہم کرتی ہے۔ اس مضمون میں، ہم عروقی کی عام حالتوں، عروقی صحت کی اہمیت، اور سنٹر فار ویسکولر میڈیسن کی طرف سے پیش کردہ عملی علاج کے طریقوں کا جائزہ لیں گے
۔I. عروقی صحت کی اہمیتA

. ویسکولر سسٹم کا جائزہعروقی نظام خون کی نالیوں پر مشتمل ہوتا ہے جو گردشی نظام میں اہم کردار ادا کرتی ہے۔ عروقی صحت کی اہمیت کو تسلیم کرنے کے لیے خون کی نالیوں کے کام اور ساخت کو سمجھنا ضروری ہے،

۔B،. عروقی صحت اور اس کے اثرا ت مختلف طرز زندگی اور طبی عوامل عروقی صحت کو متاثر کر سکتے ہیں۔ زیادہ سے زیادہ عروقی صحت کو برقرار رکھنے کے لیے ان خطرے والے عوامل کی نشاندہی بہت ضروری ہے۔ مزید برآں، علاج نہ کیے جانے والے عروقی حالات شدید پیچیدگیوں کا باعث بن سکتے ہیں، جو بروقت تشخیص اور علاج کی اہمیت کو اجاگر کرتے ہیں۔
دیسی حکماء کا تجربہ اس بارہ میں بہت زیادہ ہوتا ہے۔اگر ٹھیک طریقت سے تشخیص کرلی جائے تو معالج و مریض دونوں کو اطمنان ہرتا ہے

۔II عام عروقی حالاتA

،. پیریفرل آرٹری ڈیزیز (PAD)پیریفرل آرٹری ڈیزیز (PAD) اس وقت ہوتی ہے جب atherosclerosis پردیی شریانوں کو تنگ کر دیتا ہے، جس سے اعضاء میں خون کا بہاؤ کم ہو جاتا ہے۔ PAD کے موثر انتظام کے لیے علامات کو پہچاننا اور مناسب تشخیص سے گزرنا ضروری ہے۔خون کی نالیوں کی تنگی کا کوئی نہ کوئی سبب ضرور ہوتا ہے،اگر یہ سبب دور کردیا جائے تو خون کی نالیوں کو تندرست رکھا جاسکتا ہے

بی۔۔ ڈیپ وین تھرومبوسس (DVT)ڈیپ وین تھرومبوسس (DVT) سے مراد گہری رگوں میں، عام طور پر ٹانگوں میں خون کے لوتھڑے بننا ہے۔ سنگین نتائج کو روکنے کے لیے DVT کی وجوہات، خطرے کے عوامل، علامات اور ممکنہ پیچیدگیوں کو سمجھنا بہت ضروری ہے۔

۔C. Varicose VeinsVaricose رگیں بڑھی ہوئی اور بٹی ہوئی رگیں ہیں جو رگوں کی گردش کو متاثر کر سکتی ہیں۔ ویریکوز رگوں کے انتظام اور وینس کی صحت کو بہتر بنانے کے لیے کم سے کم ناگوار طریقہ کار دستیاب ہیں۔ لیکن دیسی طب میں اس کے آسنا اور غذائی علاج موجود ہیں۔

۔III ویسکولر میڈیسن میں تشخیصی تکنیک

.A. ویسکولر الٹراساؤنڈویسکولر الٹراساؤنڈ ایک غیر حملہ آور امیجنگ تکنیک ہے جو صحت کی دیکھ بھال کرنے والے پیشہ ور افراد کو خون کے بہاؤ کو دیکھنے اور عروقی مسائل کی نشاندہی کرنے کی اجازت دیتی ہے۔ ڈوپلر الٹراساؤنڈ خون کے بہاؤ کی رفتار کا اندازہ لگا سکتا ہے اور اسامانیتاوں کا پتہ لگا سکتا ہے۔؎
ایک ماہر طبیب انگلیوں کے پوروں کی مدد سے بآسانی تشخیص کرسکتا ہے

۔B. انجیوگرافیانجیوگرافی ایک کیتھیٹر پر مبنی امیجنگ کا طریقہ کار ہے جو خون کی نالیوں کا تصور کرتا ہے۔ عروقی حالات کی تشخیص اور علاج میں انجیوگرافی کے فوائد اور استعمال کو سمجھنا بہت ضروری ہے۔اگر کوشش کی جائے اور بہترین غذا کا انتخاب سے خطرات کو کم کیا جاسکتا ہے

چہارم علاج کے مؤثر طریقےA۔

. انجیو پلاسٹی اور سٹینٹنگانجیو پلاسٹی میں خون کے بہاؤ کو بہتر بنانے کے لیے تنگ شریانوں کو چوڑا کرنا شامل ہے، جب کہ اسٹینٹنگ میں شریانوں کی دیواروں کو سہارا دینے اور برتن کی پیٹنسی کو برقرار رکھنے کے لیے اسٹینٹ ڈالنا شامل ہے۔ یہ طریقہ کار مختلف عروقی حالات کے انتظام میں موثر ہیں۔
ناگریزی طریق علاج میں گرمی سردی کا کوئی تصور موجود نہیں نہیں ہے۔جب کہ سائنس کا قانون ہے سخت چیز کو حرارت پہنچاکر نرم کیا جاسکتا ہے۔کیونکہ تنگی کا سبب سردی اور کثافت کی وجہ سے نالیوں میں تنگی پیدا ہوجاتی ہے۔یعنی جسم میں جس قدر رعارت کی ضرورت تھی موجود نہیں ہے۔اگر یہ رارت کسی بھی انداز میں پیدا کردی جائے تو مصنوعی انداز سے نالیوں کی کشادگی کی نوبت نہ آئے۔
۔.B. تھرومبولائسز

تھرومبولائسز میں متاثرہ وریدوں میں خون کے جمنے کو توڑنے کے لیے ادویات کا انتظام کرنا شامل ہے۔ یہ بعض عروقی حالات کے لیے ایک قابل قدر علاج کا اختیار ہے۔C. Endovascular Aneurysm Repair (EVAR)Endovascular Aneurysm Repair (EVAR) ایک کم سے کم ناگوار طریقہ کار ہے جس میں aortic aneurysms کے علاج کے لیے سٹینٹ گرافٹ پلیسمنٹ شامل ہوتی ہے۔ یہ مریضوں کے لیے کئی فوائد اور تحفظات پیش کرتا ہے۔
جدید میڈیکل کی تحقیقات نے ثابت کیا ہے کہ نالیوں میں جمے ہوئے لوتھڑے کو نکال دیا جائے تو مریض کی ےکلیف دور کی جاسکتی ہے۔سابقہ سطور میں لکھا جاچکا ہے کہ سب معلوم کریں کہ لوتحرے کیوں پیدا ہوئے،اگر آپریشن کرکے لوتھرے نکال بھی دئے جائیں تو کیا گانرٹی ہے کہ دوبارہ لوتھڑے نہیں بنیں گے؟۔۔۔دیسی طریقہ علاج می ں کچھ غذائی اور دوائیں ایسی ہیں جو یہ کام آسانی سے کرسکتی ہیں
اطباء کرام کو اس بارہ میںغور کرنا چاہئے۔

۔V. جدید علاج کے اختیارات

A. AtherectomyAtherectomy میں شریانوں میں تختی کی تعمیر کو دور کرنے کے لیے خصوصی آلات کا استعمال شامل ہے۔ یہ طریقہ کار عروقی حالات کو سنبھالنے اور مجموعی عروقی صحت کو بہتر بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے
مصنوعی آلات کئے بجائے اگر جسم کا نظام ٹیک طریقے سے بحال کردیا جائے تو اس کی نوبت ہی نہ آئے

۔B. سٹیم سیل تھراپیاسٹیم سیل تھراپی عروقی شفا یابی اور مرمت کو فروغ دینے کے لیے اسٹیم سیلز کا استعمال کرتی ہے۔ جاری تحقیق عروقی طب میں علاج کے اس جدید طریقہ کی تاثیر کی تحقیقات کر رہی ہے
جو بات ہم بار بار لکھ چکے ہیں کہ جہاں ٹھنڈک ہے وہاں مناسب حرارت پیدا کرکے مطلوبہ نتائج اخذ کئے جاسکتے ہیں

۔VI گلین برنی کے ویسکولر میڈیسن کے مرکز کا کردار

A. جامع عروقی نگہداشت

گلین برنی کا سینٹر فار ویسکولر میڈیسن عروقی نگہداشت میں خصوصی مہارت پیش کرتا ہے۔ تجربہ کار عروقی ماہرین سے نگہداشت حاصل کرنا بہترین نتائج کے لیے بہت ضروری ہے۔ مرکز ذاتی نوعیت کے علاج کے منصوبوں پر توجہ مرکوز کرتے ہوئے، مریض پر مبنی نقطہ نظر پر بھی زور دیتا ہے

۔B. جدید ترین سہولیا ت

مرکز درست تشخیص اور علاج کے لیے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کرتا ہے۔ مریض کے آرام اور تیزی سے صحت یابی کو یقینی بنانے کے لیے کم سے کم ناگوار طریقہ کار پر زور دیا جاتا ہے۔آخر میں، عروقی طب ایک اہم شعبہ ہے جو مختلف عروقی حالات کو حل کرتا ہے اور مجموعی صحت کو نمایاں طور پر برقرار رکھتا ہے۔
یہی نکتہ اس مضمون کا لب لباب ہے کہ درست تشخیص سے کسی بھی علامت کو بہتر انداز مین درست کیا جاسکتا ہے
ہم جو غذا کھاتے ہیں اسی میں بے اعتدالی امراض کا سبب بنتی ہے ہم غذائی بتےاعتدالی کو دواکے استعمال سے دور کرنے کی کوشش کرتے ہیں،یاد رکھئے ہمارے جسم کی فطری خوراک غذا ہے دوا نہیں ہے۔دا کو بطور معاون و مددگار کے کچھ وقت کئے لئے کام میں لایا جاکستا ہے۔اگر غزائی نظام درست کردیا جائے وت بہت امراض بلا دوا استعمال کئے ٹھیک کئے جاسکتے ہیں۔

Hakeem Qari Younas

Assalam-O-Alaikum, I am Hakeem Qari Muhammad Younas Shahid Meyo I am the founder of the Tibb4all website. I have created a website to promote education in Pakistan. And to help the people in their Life.

Leave a Reply